ہدایات برائےمضمون/ مضمون نگار

برائے مہربانی اپنامضمون بھیجتے ہوئے مندرجہ ذیل امورکاخیال رکھیں تاکہ آپ کامضمون یا کوئی بھی تحریرجلدشائع کی جاسکے۔

(۱) ادارہ جام نورکو اپنی تحریران پیج یا ورڈ فارمٹ میں ہی ارسال کریں۔

(۲) مضمون کے ساتھ اپنی تصویر ارسال کرنا نہ بھولیں۔ کالم ’’اظہارخیالات‘‘کے لیے لکھی گئی تحریر کے ساتھ تصویربھیجنے کی ضرورت نہیں۔

(۳)  اپنی تحریربھیجنے سے قبل اس کی اچھی طرح سے پروف ریڈنگ کرلیں،جس تحریر میں جتنی کم غلطیاں ہوں گی،وہ اتنی جلدشائع ہوسکے گی۔

(۴) تحریرکی طوالت ۱۵۰۰ ؍الفاظ سے زیادہ نہیں ہونی چاہیے،البتہ بعض صورتوں میں استثنایارعایت دی جاسکتی ہے۔

(۵) ایسامضمون ادارے کو ہرگزنہ بھیجیں جسے آپ نے دوسرے اخباریا میگزین کو بھی اشاعت کے لیے بھیجا ہے۔مضمون بھیجنے کے بعداگردس دنوں کے اندرشائع نہیں کیاجاتا تو ایسی صورت میں آپ اپنا مضمون دوسرے اداروں کو بھیج سکتے ہیں۔

(۶) آپ کی تحریر غیرمطبوعہ ہونی چاہیے،ایسی تحریرجوپہلے کسی میگزین،اخباریافیس بک پرشائع ہوچکی ہے،(بعض استثنائی صورتوں کے علاوہ )ادارہ اسے شائع کرنے سے معذورہوگا۔

(۷) کسی بھی تحریر کی اشاعت کا اختیارمجلس ادارت رکھتی ہے،مدیرکو یہ حق حاصل ہے کہ وہ تحریرکوقابل شاعت بنانے کے لیے قطع و برید سے کام لے۔اگرآپ مجلس ادارت کے اس اختیارسے متفق نہیں ہیں تو براہ کرم اپنی تحریرادارےکو نہ بھیجیں۔

(۸) اپنامضمون،تبصرہ،خط ،اظہارخیال مندرجہ ذیل ای میل پر بھیجیں:

jaamenoor@gmail.com

(۹) جام نوراسلامی حدودکے اندرآزادی اظہاررائے کا حامی ہے،اس لیے ہر وہ تحریرجو کسی  موضوع کی حمایت یا اختلاف میں لکھی جائے گی،ادارہ جام نور اسے خوش آمدید کہے گا،  جب کہ اتحادواختلاف عمومی تہذیب کے دائرے میں ہو۔

(۱۰) جام نور تمام لکھنے والوں کے حق اشاعت کا احترام کرتا ہے،مگران تمام تحریروں میں شائع مواد اورخیالات سے ادارے کا کلی یا جزوی  اتفاق ضروری نہیں۔